ملک گیر ہڑتال کا اعلان

وکلا پرتشدد،پاکستان بار کونسل کا کل ملک گیر ہڑتال کا اعلان

ویب ڈیسک: لاہور میں وکلا کے احتجاج پر پولیس کے تشدد اور لاٹھی چارج کے بعد پاکستان بار کونسل نے ملک بھر میں احتجاج کا اعلان کردیا ہے۔
وکیل رہنما احسن بھون نے ایک بیان میں اعلان کیا کہ کل ملک بھر میں ہڑتال اور احتجاج کی کال دے دی ہے۔
انہوں نے کہا کہ کل کوئی وکیل ملک بھر کی عدالتوں میں پیش نہ ہو، کل ملک بھر میں وکلا ریلیاں نکالیں گے۔
تفصیلات کے مطابق، لاہور میں سول عدالتوں کی منتقلی اور وکلا پر دہشتگری کے مقدمات کے خلاف جی پی او چوک پر وکلا کے احتجاج پر پولیس کی جانب سے لاٹھی چارج اور شیلنگ کی گئی۔
وکلا اور پولیس کے درمیان تصادم کے باعث جی پی او چوک میدان جنگ کا منظر پیش کرنے لگا۔
وکلا کے پولیس پر پتھراؤاور پولیس کی وکلا پر آنسو گیس کی شیلنگ اور لاٹھی چارج کے بعد صورتحال کشیدہ ہوچکی ہے اور پولیس نے لاہور ہائیکورٹ کی تالہ بندی کردی ہے۔
لاہور ہائیکورٹ بار کی جانب سے آج ریلی نکالنے کا اعلان کیا گیا تھا یہ ریلی ایوان عدل سے شروع ہوکر جی پی او چوک لاہور ہائیکورٹ تک آنی تھی۔ تاہم لاہور ہائیکورٹ کے باہر پہلے سے ہی پولیس کی بھاری نفری اور واٹر کینن موجود تھی۔
ریلی لاہور بار ایسوسی ایشن کی جانب سے سول عدالتوں میں تقسیم اور وکلا پر درج دہشتگردی کے مقدمات کے خلاف نکالی جارہی تھی۔
وکلا کی ریلی جیسے ہی جی پی اوک چوک پہنچی تو وہاں پر موجود پولیس اہلکاروں نے لاٹھی چارج شروع کردیا وکلا کی جانب سے بھی پولیس پر پتھراؤکیا گیا، جس کے بعد جی پی او چوک میدان جنگ بن گیا۔اس دوران پولیس نے مظاہرین پر لاٹھی چارج کیا اور آنسو گیس کے شیل برسائے۔
پولیس کی جانب سے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے واٹرکینن کا بھی استعمال کیا گیا،پولیس نے مظاہرے میں شریک وکلا کو گرفتار بھی کیا۔
وکلا نے جی پی او چوک اور ہائیکورٹ کے باہر لگے بیریئرز کو ہٹا دیا اور پولیس پر پتھرا ؤجاری رکھا جس کے نتیجے میں ایس پی ماڈل ٹاؤن زخمی ہوگئے

مزید پڑھیں:  رفح اور غزہ میں صیہونیوں کی وحشیانہ بمباری، مزیر 75 فلسطینی شہید