وزیراعظم آزاد کشمیر

انارکی پھیلانے والوں کو معاف نہیں کیا جا سکتا،وزیراعظم آزاد کشمیر

ویب ڈیسک: وزیراعظم آزاد جموں کشمیر چودھری انوارالحق نے کہا کہ معاشی مسائل کے باوجود وفاقی حکومت نے 23 ارب روپے کا تاریخی پیکیج دیا، انارکی پھیلانے والوں کو معاف نہیں کیا جا سکتا۔
وزیراعظم آزاد جموں کشمیر پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ کشمیریوں کو کبھی بھی تنہا نہیں چھوڑیں گے، کشمیریوں کا پاکستان سے مضبوط اور لازوال رشتہ ہے جو ہماری آنے والی نسلوں تک رہے گا۔
انہوں نے کہا کہ نے کہا کہ الحاق پاکستان ہماری منزل ہے، آزاد کشمیر پرامن خطہ ہے اور اس کی فضا کو خراب نہیں ہونے دیں گے، احتجاجی تحریک میں انسانی جانوں کے ضیاع پر شدید افسوس ہے، ہم نے ملکر ریاست کے نظام کو مضبوط بنانے کے لئے کردار ادا کرنا ہے۔
وزیراعظم آزاد کشمیر نے مزید کہا کہ شرپسند قوتوں کو روکنا ہے، انارکی پھیلانے والوں کو معاف نہیں کیا جا سکتا، جب تک ہوں اپنے اسلاف کے نظریئے پر کسی بھی قسم کی آنچ نہیں آنے دوں گا۔
انہوں نے کہا کہ ایکشن کمیٹی کو عوامی تحریک کی کامیابی پر شکر ادا کرنا چاہئے، عوامی اور ریاستی مفادات کے لئے ملکر کام کریں گے، پرامن فضا کو خراب کرنے کی کوشش کرنے والے چند عناصر ہیں، ایسے لوگوں کو ناکام بنانا ہے، 3 ارب روپے کی لاگت سے بے روزگاری کے خاتمے کیلئے انڈوومنٹ فنڈ قائم کریں گے۔
چودھری انوارالحق نے کہا کہ آزادکشمیر کے ہنرمند نوجوانوں کو بلاسود قرضے دیئے جائیں گے، روڈ انفراسٹرکچر میں 16 ارب روپے خرچ کئے گئے، مجھ پر 16 روپے کی کرپشن ثابت کریں، صحت عامہ، تعلیم، برقیات، ٹورازم میں بجٹ خرچ ہوا، کسی بھی جگہ کرپشن کی نشاندہی کریں۔
ان کا مزید کہنا تھا کہ سوشل پروٹیکشن انڈوومنٹ فنڈ کے تحت آزادکشمیر کے پسے ہوئے طبقات کی کفالت کی جائے گی، جب تک اختیار ہے آزاد کشمیر کے عوام کی خدمت کرتا رہوں گا۔

مزید پڑھیں:  اسحاق ڈار کی بطور ڈپٹی وزیراعظم تعیناتی کیخلاف درخواست سماعت کیلئے مقرر