جوڈیشل کمیشن

سپریم کورٹ میں ججز تقرر ی کیلئے جوڈیشل کمیشن کا اجلاس طلب

ویب ڈیسک: سپریم کورٹ آف پاکستان میں3 ججز کی تقرری کے لیے جوڈیشل کمیشن کا اجلاس طلب کرلیا گیا ۔
میڈیا رپورٹ کے مطابق سپریم کورٹ میں مزید 3 ججز کی تعیناتی کے لیے جوڈیشل کمیشن کا اجلاس 7جون کو ہوگا جس میں ججز کے ناموں پر غور ہوگا، لاہور ہائی کورٹ کے 6ججز کے نام بھی زیر غور آئیں گے۔
ذرائع کے مطابق سندھ ہائی کورٹ کے 3ججز کے نام بھی سپریم کورٹ میں تعیناتی کے لیے زیر غور آئیں گے۔
ذرائع نے بتایا کہ چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ ملک شہزاد احمد کا نام زیر غور ناموں میں شامل ہے جب کہ چیف جسٹس سندھ ہائیکورٹ عقیل عباسی کے نام پر بھی ملک کی اعلی عدالت میں تعیناتی کے لیے غور کیا جائے گا۔
واضح رہے کہ رواں ماہ کے شروع میں جوڈیشل کمیشن رولز میں ترامیم سے متعلق جوڈیشل کمیشن کا اجلاس چیف جسٹس قاضی فائز عیسی کی زیر سربراہی منعقد ہوا تھا، جس میں ججز کی تقرریاں موجودہ رولز کے تحت کرنے پر اتفاق کیا گیا تھا۔
اجلاس کا ایجنڈا جوڈیشل کمیشن رولز میں مجوزہ ترامیم کا جائزہ لینا تھا اور دوران اجلاس چیئرمین جوڈیشل کمیشن قاضی فائز عیسی نے اراکین سے مجوزہ تجاویز پر رائے طلب کی تھی۔
وفاقی وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ نے اجلاس موخر کرنے کی گزارش کی اور کہا تھا کہ وفاقی حکومت آئین کے آرٹیکل 175۔اے میں ترمیم پر غور کر رہی ہے، انہوں نے کہا تھا کہ مجوزہ ترمیم کے ذریعے جوڈیشل کمیشن کی ساخت تبدیل ہو سکتی ہے۔
اعلامیے کے مطابق جسٹس یحییٰ آفریدی نے ایجنڈے پر بحث نہ کرنے اور اجلاس ملتوی کرنے کی تجویز دی جس پر تمام اراکین نے اجلاس ملتوی کرنے پر اتفاق کیا تھا۔
اجلاس میں اتفاق کیا گیا تھا کہ ججز کی تقرری کے معاملے پر تاخیر نہیں ہونی چاہیے جبکہ ججز کی تقرریاں موجودہ رولز کے تحت کرنے پر اتفاق کیا گیا۔

مزید پڑھیں:  بلاول بھٹو نے وزیراعظم کی دعوت قبول کرلی،ملاقات پر اتفاق