فواد چوہدری

شکست نے اپوزیشن کو اکٹھا کر دیا: فواد چوہدری کی ن لیگ اور پی پی پر تنقید

وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات چوہدری فواد حسین نے پاکستان مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ سینیٹ میں اپوزیشن کی شکست نے انہیں اکٹھا کر دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق گزشتہ ماہ سینیٹ نے اسٹیٹ بینک آف پاکستان (ترمیمی) بل 2021 کو اپوزیشن کے شور شرابے کے درمیان منظور کیا تھا، جہاں انہیں اکثریت حاصل ہے۔

مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی کی جانب سے ہفتے کے روز موجودہ حکومت گرانے کے لیے "تمام آپشنز” استعمال کرنے کا فیصلہ کیے جانے کے فوراً بعد وزیر اطلاعات و نشریات فواد چوہدری نے بیجنگ میں پریس کانفرنس کے دوران کہا کہ اپوزیشن کو سینیٹ میں جس ذلت آمیز شکست کا سامنا کرنا پڑا اس کا نتیجہ آج کے اجلاس میں ہوا ہے اور انہیں مستقبل میں بھی ایسی ہی شکستوں کا سامنا کرنا پڑے گا۔

مزید پڑھیں:  کوئٹہ، زرغون غر میں پکنک پوائنٹ سے 10 افراد اغوا

یہ بھی پڑھیں: حکومت نے جس طرح کشمیر کا سودا کیا ملک کا بھی کرسکتے ہیں

یہ بھی پڑھیں: مسلم لیگ ن اور پی پی میں موجودہ حکومت سے چھٹکارہ حاصل کرنے پر اتفاق

فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ وقت گزرنے کے ساتھ ساتھ پاکستان ڈھیلی ڈھالی موومنٹ کی مایوسی بڑھتی جا رہی ہے اور ان کا صبر ختم ہونا شروع ہو گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اپوزیشن کو یقین ہے کہ انہیں اگلے انتخابات میں شکست کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے، اس لیے انہوں نے ہاتھ ملانے اور الیکشن لڑنے کا فیصلہ کیا ہے۔

مزید پڑھیں:  عیدالاضحٰی: ملک بھر میں 12 لاکھ سے زائد جانور ذبح کیے گئے

وفاقی وزیر اطلاعات کا کہنا تھا کہ جب بھی کوئی حکومت بیرون ملک میں جمع کرائے گئے پیسوں کو لانے کی کوشش کرتی ہے یا ان کے جرائم کو روکنے کی کوشش کرتی ہے تو اپوزیشن جماعتیں اکٹھی ہونے لگتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ مجرموں کا گروہ ہے۔