انسانی حقوق کی صورتحال

امریکہ کو پاکستان میں انسانی حقوق کی صورتحال پر تشویش

ویب ڈیسک: امریکہ نے پاکستان میں انسانی حقوق کی صورتحال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے غیرقانونی حراست، سیاسی قیدیوں، میڈیاکی آزادی، صحافیوں پر تشدد اور بلاجواز گرفتاریوں سمیت آزادی اظہار پر پابندیوں کی نشاندہی کی ہے ۔
امریکی محکمہ خارجہ کی جانب سے جاری کی گئی سالانہ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ پاکستان میں گزشتہ سال انسانی حقوق کی صورتحال میں خاص تبدیلی نہیں دیکھی گئی۔
رپورٹ کے مطابق کئی شعبوں میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کی قابلِ اعتماد رپورٹس ملیں۔
رپورٹ میں غیرقانونی حراست، سیاسی قیدیوں، میڈیاکی آزادی، صحافیوں پر تشدد اور بلاجواز گرفتاریوں سمیت آزادی اظہار پر پابندیوں کی نشاندہی کی گئی۔
رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ خواتین صحافیوں کو خاص طورپر جنسی تشدد اور ہراسانی کے خطرات کا سامنا کرنا پڑا۔
توہین مذہب کیخلاف قوانین، اقلیتوں کے خلاف واقعات، انٹرنیٹ کی آزادی پر پابندیوں پربھی پریشانی کا اظہار کیا گیا۔
رپورٹ کے مطابق عسکریت پسند تنظیموں اور دیگر غیر ریاستی عناصرکے تشدد کے باعث لاقانونیت بڑھی جبکہ سرحدپار سے شدت پسندوں کے حملوں میں بھی کئی پاکستانیوں کی جان گئی۔

مزید پڑھیں:  مانسہرہ میں جڑواں بھائیوں کے ہاتھوں بہن قتل