قیمہ بھرے کریلے

ویب ڈیسک:کریلے کے بے شمار طبی فوائد ہیں۔ غذائیت کے لحاظ سے کریلوں میں وٹامن اے، ڈی، سی اور بی 6کے علاوہ پروٹین اور پوٹاشیم کی بھی مقدار پائی جاتی ہے۔ اس میں کیلوریز اور کولیسٹرول کی مقدار صفر ہوتی ہے۔ کریلوں کو کئی طریقوں سے استعمال کیا جا سکتا ہے یعنی پکا کر، جوس نکال کر یا پھر سوپ اور سلاد میں شامل کر کے۔ کریلے کھانے سے شوگر کی مقدار کم ہوتی ہے، پیٹ کے کیڑے مر جاتے ہیں اور جگر کے افعال درست ہوتے ہیں۔ کریلا اگرچہ کھانے میں تھوڑا سا کڑوا ہوتا ہے مگر قیمہ بھرے کریلے سب ہی کھانا پسندکرتے ہیں۔

درکار اجزاء:

قیمہ۔ 1پاؤ

کریلے۔ 4عدد

گڑ۔ آدھا چائے کا چمچ

کلونجی۔ 2چٹکیاں

پیاز (چھوٹی)۔ 1عدد

املی۔ آدھا کپ

سونف۔ آدھا چائے کا چمچ

ہلدی۔ آدھا چائے کا چمچ

ہری مرچ۔ 3عدد

تیل۔ 1پیالی

ادرک لہسن پیسٹ۔ آدھا کھانے کا چمچ

پسی لال مرچ۔ آدھا کھانے کا چمچ

نمک۔ حسب ذائقہ

ترکیب:

کریلے چھیل کے درمیان سے چیرا لگا کر بیج نکال لیں۔ انہیں بغیر دھوئے نمک، ہلدی اور گڑ لگا کر رکھ دیں۔ آدھے گھنٹے بعد پانی سے دھو کر چھلنی میں نچڑنے کے لیے رکھ دیں۔ اب پتیلی میں تھوڑا سا تیل ڈال کر گرم کریں اور اس میں پیاز ڈال کر فرائی کریں۔ جب پیاز ہلکی گلابی ہو جائے تو نکال لیں۔ پھر قیمہ، ادرک، لہسن، کلونجی، نمک، ہلدی، سونف اور مرچ ڈال کر اچھی طرح بھون لیں۔ جب پانی خشک ہو جائے تو فرائی کی ہوئی پیاز اور ہری مرچ ڈال کر ڈھکن سے ڈھک کر 5منٹ کے لیے دَم پر رکھ دیں۔

پھر چولہا بند کریں اور ٹھنڈا ہونے دیں۔ جب ٹھنڈا ہو جائے تو اسے کریلوں میں بھر کر انہیں اچھی طرح بند کر کے دھاگا باندھ دیں۔ اب ایک پین یا کڑاہی میں تیل گرم کر کے اس میں اچھی طرح فرائی کر لیں۔ جب وہ گولڈن ہو جائیں تو نکال لیں اور قیمہ والی پتیلی میں رکھ دیں۔ پھر املی کا رس اور تھوڑا سا گڑ ڈال کر 10 منٹ کے لیے دَم پر رکھ دیں۔ تیل اوپر آنے پر قیمہ بھرے کریلے تیار ہوجائیں گے۔