چیئرمین پی ٹی آئی جیل

عمران خان کے سیل کے باہر سی سی ٹی وی کیمروں کی تصدیق

ویب ڈیسک: عمران خان کے سیل کے باہر سی سی ٹی وی کیمروں کی تصدیق ، ذرائع کے مطابق محکمہ جیل خانہ جات کی جانب سے تصدیق کرتے ہوئے بتایا گیا ہےکہ عمران خان کے سیل کے باہر سی سی ٹی وی کیمرے نصب کیے گئے ہیں، ترجمان محکمہ جیل خانہ جات کے مطابق عمران خان کے لئے انکے کمرے میں بروز ہفتہ نیا واش روم تعمیر کیا گیا ہے جس میں ویسٹرن کموڈ اور واش بیسن لگائے گئے ہیں۔ واش روم میں باتھ سوپ ، پرفیوم، ائیر فریشنر، تولیہ اور ٹیشو پیپر بھی موجود ہیں۔ واش روم کی دیواریں 5 فٹ اونچی رکھی گئی ہیں اور باتھ روم کو نیا دروازہ لگایا گیا ہے۔
چئیرمین پاکستان تحریک انصاف کے کمرے میں بیڈ، تکیہ ، بیڈ میٹرس ، میز ، کرسی ، ائیر کولر ، فروٹ ، شہد ، کھجوریں ، جائے نماز انگریزی ترجمے کے ساتھ قران مجید اور مطالعہ کیلئے ایک درجن کے قریب کتابیں، چائے تھرمس، اخبار اور ٹیشو پیپر موجود ہیں۔
چیئرمین پاکستان تحریک انصاف کی منگل کے روز فیملی اور جمعرات کے روز وکلاء سے قانون کے مطابق ملاقات کرائی جاتی ہے۔عمران خان کو طبی سہولیات کی فراہمی کے لئے پانچ ڈاکٹر تعینات کئے گئے ہیں۔ آٹھ گھنٹے ڈیوٹی پر ایک ڈاکٹر ہمہ وقت موجود رہتا ہے۔
ڈاکٹر کی ہدایت اور آئی جی جیل خانہ جات پنجاب میاں فاروق نذیر کی منظوری سے چئیرمین پاکستان تحریک انصاف کو سپیشل خوراک دی جاتی ہے ، جسے ڈاکٹر کی چیکنگ کے بعد سپیشل ٹیم کے ذریعے مہیا کیا جاتا ہے۔
عمران خان اور جیل سیکیورٹی کے لئے انکے کمرے کے باہر برآمدے میں سی سی ٹی وی کیمرے نصب کئے گئے ہیں۔ صرف ڈسٹرکٹ جیل اٹک میں نہیں بلکہ پنجاب کی باقی جیلوں میں بھی سیکیورٹی کے لیے 4000 سے زائد سی سی ٹی وی کیمرے نصب کئے گئے ہیں۔

مزید پڑھیں:  امریکہ کا ایران پر ڈونلڈ ٹرمپ کے قتل کی سازش کا الزام