چین اوربھارت کے درمیان پھرکشیدگی،سرحدپراضافی فوج تعینات

ویب ڈیسک :بھارت اور چین کے درمیان سرحد پر کشیدگی جاری ہے اور چین نے فوجیوں کی تعداد میں اضافہ بھی کردیا ہے۔بھارتی فوج کے سربراہ جنرل منوج پانڈے نے جمعرات کے روز بتایا کہ ریاست اروناچل پردیش کے قریب سرحد پر چینی فوج کی تعداد میں اضافہ ہوگیا ہے جس پر ہم گہرے نظر رکھے ہوئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ سرحد پر کشیدگی ہے اور غیرمتوقع صورت حال ہے مگر ہم شمالی سرحدوں پر صورت حال کو مستحکم رکھنے کی کوشش کررہے ہیں۔ شمالی سرحد پر چین کی جانب سے اہلکاروں کی تعیناتی اسی طریقے سے جاری ہے۔
ہمارے پاس اتنی ہی تعداد میں فوجی موجود ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ لائن آف ایکچوئل کنٹرول کے ساتھ تعینات فوجی چوکس ہیں جو کسی بھی جارحیت کا جواب دینے کے لیے ہمہ وقت تیار ہیں۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ ہندوستانی فوج چین کے ساتھ میز پر موجود سات مسائل میں سے پانچ کو حل کرنے میں کامیاب رہی ہے اور ہم فوجی اور سفارتی دونوں سطحوں پر بات کرتے رہتے ہیں۔ کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کے لیے ہمارے پاس کافی ذخائر ہیں۔

مزید دیکھیں :   تباہ کن زلزلہ، ترکیہ اور شام میں جانبحق ہونے والوں کی تعداد 12 ہزار کے قریب ہوگئی