گھنٹہ گھر مچھلی منڈی گندگی

تاریخی گھنٹہ گھر مچھلی منڈی اور گندگی کے ڈھیر میں تبدیل

ویب ڈیسک(پشاور) پشاور کے تاریخی مقام گھنٹہ گھر کی تاریخی حیثیت ماند پڑ گئی، مچھلی فروشوں نے تاریخی مقام کا حلیہ بگاڑ کر رکھ دیا ہے جبکہ انتظامیہ کی جانب سے اس کے تحفظ کیلئے سنجیدگی نہیں دکھائی جا رہی ہے، گھنٹہ گھر کے وسط میں قائم مچھلی منڈی نے اس مقام کو گندگی کا ڈھیر بنا دیا ہے جہاں پر ہر وقت مچھلیوں کے گند سے اٹھنے والے تعفن کی وجہ سے یہاں سے گزرنا محال ہو گیا ہے جبکہ کروڑوں روپے کی لاگت سے تعمیر کیا جانے والا ہیرٹیج ٹریل بھی کچھ ہی عرصہ میں مچھلی منڈی کی وجہ سے تباہ ہوگیا ہے،

گھنٹہ گھر جس کی اپنی تاریخی حیثیت ہے اب اس مقام کو لوگ مچھلی منڈی کے نام سے جاننے لگے ہیں، تاریخی مقام کے تحفظ کیلئے کچھ عرصہ قبل انتظامیہ نے مچھلی فروشوں کو دکانوں کے اندر شیشے لگانے کا کہا تھا تاکہ دکانوں کا گند باہر نہ آئے لیکن کچھ ہی عرصہ بعد دکانداروں نے شیشے ہٹا دیئے اور انتظامیہ کی جانب سے بار بار نوٹس میں لانے باوجود کارروائی نہیں جارہی، مقامی لوگوں نے الزام لگایا ہے کہ انتظامیہ میں موجود چند افراد کو باقاعدہ دکانداروں اور ہتھ ریڑھی والوں کی جانب سے ماہواری دی جاتی ہے یہی وجہ ہے کہ ان کے خلاف کارروائی نہیں کی جارہی۔