کابل میں خواتین احتجاجی مظاہرہ

کابل: طالبان کا خواتین مظاہرین پرمرچوں کا اسپرے

کابل میں احتجاجی مظاہرہ کرنے والے خواتین نے طالبان کی جانب سے کالی مرچوں کا اسپرے کرنے کا الزام عائد کیا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق افغان دارالحکومت کابل میں خواتین تعلیم اور ملازمت کے حقوق کے لیے احتجاج کررہی تھیں کہ اس دوران طالبان نے انہیں منتشر کرنے کے لیے کالی مرچوں کا اسپرے کردیا۔ کابل یونیورسٹی کے سامنے کچھ خواتین کی جانب سے احتجاج کیا گیا جس میں انہوں نے مساوات اور انصاف کی فراہمی کے نعرے لگائے جب کہ انہوں نے خواتین کے حقوق کے بینرز بھی اٹھارکھے تھے۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہےکہ چند گاڑیوں میں سوار طالبان جنگجو علاقے میں پہنچے اور احتجاج کرنے والی خواتین کو منتشر کرنے کے لیے اسپرے کیا۔ احتجاج کرنے والی خاتون نے کہا کہ ’جب ہم کابل یونیورسٹی کے قریب تھے تو تین گاڑیوں میں طالبان آئے اور انہوں نے ہم پر مرچوں والے سپرے کا استعمال کیا،میری آنکھیں جلنا شروع ہو گئیں اور میں نے ایک طالبان سے کہا کہ تمہیں شرم آنی چاہیے تو اس نے مجھ پر بندوق تان لی۔‘

دیگر دو خاتون مظاہرین نے کہا کہ ایک خاتون کو ہسپتال لے جانا پڑا۔

یہ بھی پڑھیں:بھارتی مسلمانوں کا قتل عام ہونے والاہے،امریکہ

خیال رہے کہ گزشتہ برس کابل پر کنٹرول کے بعد طالبان کی جانب سے افغانیوں بالخصوص افغان خواتین پر متعدد پابندیاں عائد کی جاچکی ہیں۔