پی ٹی آئی رہنما عثمان ڈار

پی ٹی آئی رہنما عثمان ڈار کی گمشدگی کا مقدمہ درج کرنے کا حکم

سندھ ہائیکورٹ نے پی ٹی آئی رہنما عثمان ڈار کی کراچی سے حراست میں لیے جانے کے بعد گمشدگی کیخلاف درخواست پر پولیس کو مقدمہ درج کرکے 3 اکتوبر کو رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیدیا۔
ویب ڈیسک: عدالت عالیہ نے پی ٹی آئی رہنما عثمان ڈار کی حراست اور گمشدگی کے خلاف کیس کی سماعت کی، سندھ ہائی کورٹ نے پولیس کو مقدمہ درج کر کے 3 اکتوبر کو رپورٹ دینے کی ہدایت بھی کی۔
پولیس کی جانب سے عدالت کو بتایا گیا کہ مقدمہ درج کرنے کے لیے درخواست گزار نے رجوع نہیں کیا۔
درخواست گزار کے وکیل بیرسٹر علی طاہر نے عدالت کو بتایا کہ پہلے دن ہی عثمان ڈار کی گمشدگی سے متعلق درخواست جمع کرائی تھی۔
سرکاری وکیل نے کہا کہ درخواست گزار چاہیں تو پولیس کو اپنا بیان ریکارڈ کرا سکتے ہیں، عثمان ڈار پولیس کی تحویل میں نہیں۔
درخواست گزار کے وکیل بیرسٹر علی طاہر نے کہا کہ نگران وزیر داخلہ سندھ نے ٹی وی پروگرام میں اعتراف کیا ہے کہ عثمان ڈار پولیس کی تحویل میں ہیں، اب پولیس کہتی ہے کہ عثمان ڈار کو حراست میں نہیں لیا گیا۔

مزید پڑھیں:  ورسک روڈ دھماکہ کے حوالے سے تحقیقات کا آغاز کر دیا ہے،سی سی پی او