قیوم سٹیڈیم نشے میں دھت چوکیدار

نشے میں دھت چوکیدار برہنہ ہوکر قیوم سٹیڈیم میں گھس آیا

قیوم سپورٹس کمپلکس کا چوکیدار شام ڈھلتے ہی نشے کی حالت سٹیڈیم میں گھس آیا نشے میں دھت چوکیدار نے اپنے کپڑے اتار دیئے اور وہاں موجود خواتین کھلاڑیوں اور سپورٹ سٹاف کے ساتھ بدتمیزی کی جس کے بعد سٹیڈیم کے عملہ نے اسے پکڑ لیا انتظامیہ نے چوکیدار کیخلاف تحقیقات شروع کردی ہیں جبکہ اس کی دماغی حالت کے جائزہ کیلئے کمیٹی بھی تشکیل دیدی گئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: پشاور، 3 ملزموں کی 14 سالہ لڑکی سے اجتماعی زیادتی

ذرائع کے مطابق قیوم سپورٹس کمپلیکس میں قائم سپورٹس ڈائریکٹوریٹ میں صورتحال اس وقت بگڑ گئی جب جمعہ اور ہفتہ کی درمیانی شب قیوم سپورٹس کمپلیکس کا چوکیدار چھٹی کے باوجود سٹیڈیم پہنچ گیا، ذرائع کے مطابق مبینہ طور پر شراب کے نشے دھت چوکیدارنے کپڑے اتار کر سٹیڈیم میں داخل ہو کر خواتین کیساتھ بدتمیزی شروع کردی اس وقت سٹیڈیم میں کھلاڑی اور آفیشل موجود تھے۔ موقع پر موجود چوکیداروں اور دیگر سٹاف نے نشے میں ڈوبے ملازم کو روکنے کی کوشش کی تاہم مدہوش ملازم نے ٹکریں مار مار کر کھلاڑیوں کو بھی زخمی کردیا اور خود بھی زخمی ہو گیا۔ بعد ازاں انتظامیہ نے گلبرگ پولیس کو بھی اطلاع کردی.

یہ بھی پڑھین: پشاور: باچا خان چوک میں 1000 کلو سے زائد مردہ مرغیاں برآمد

جنہوں نے موقع پر پہنچ کر ملازم کو کنٹرول کرنے کی کوشش کی تو اس نے ٹکر مار پولیس اہلکار کو بھی زخمی کردیا۔ پولیس نے واقعہ میں ملوث اہلکار کو گلبرگ تھانے منتقل کردیا اور تحقیقات شروع کردی۔ سپورٹس ڈائریکٹوریٹ کے مطابق چوکیدار کا دماغی توازن ٹھیک نہیں میڈیکل بورڈ تشکیل دیدیا گیا ہے رپورٹ آنے کے بعد مزید کارروائی کی جائے گی۔